’نیشنل کمپیٹیشن آف ینگ فزیکسٹ‘‘ کے عنوان پر دو روزہ مقابلے کا انعقاد

0
SONY DSC

راولپنڈی(نامہ نگار) اورک( آفس آف ریسرچ انوویشن اینڈ کمرشلائزیشن)فاطمہ جناح ویمن یونیورسٹی کے ڈیپارٹمنٹ فزکس اور ینگ پاکستان فزیکسٹ ٹورنامنٹ کے تعاون سے 25 سے 26 جنوری 2020ء کو’’ نیشنل کمپیٹیشن آف ینگ فزیکسٹ‘‘ کے عنوان پر دو روزہ مقابلے کی افتتاحی تقریب کا انعقاد فاطمہ جناح ویمن یونیورسٹی میں کیا گیا ۔

افتتاحی تقریب کے مہمانے خصوصی سابق چیئرمین ہائیر ایجوکیشن کمیشن پروفیسر ڈاکٹر ،مختار احمدتھے انہوں نے فاطمہ یونیورسٹی کو سراہتے ہوئے کہا کہ مجھے خوشی ہے کہ اس ٹورنامنٹ کا انعقاد کیا گیا اورنواجوان شرکاء سے بات کرتے ہوئے کہا کہ مسلمان سائنس دان ماضی کے دور میں طبیعیات کے میدان میں کمال کے ماہر تھے اس کے بعد مسلمان ایسے سائسندانوں اور فزیکٹس سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں ۔ ریاضی ،طبیعیات ، کیمسٹری اور انجیینئرنگ کو بنیادی مضامین سمجھا جاتا ہے ۔ اگر ہم اپنے ارد گرد نظر ڈالیں تو ہ میں سب چیزوں کی بنیاد ریاضی ،طبیعیات ، کیمسٹری ہی ملی گی ۔ اگر ہم نے اپنے سائسندانوں ، فزکس اور ریاضی کے شعبوں کا مطالعہ نہیں کیا یا توجہ نہیں دی تو ہ میں آج کے دور میں انٹر نیٹ یا کس بھی چیز سے لطف انداوز نہیں ہونا چاہیں کیونکہ آج ہم سائنس اور تعلیم کی بدولت ہی ان چیزوں سے لطف انداوز ہورئے ہیں ۔

کوئی بھی قوم جو بنیادی تعلیم کی پہلوءوں پر توجہ نہیں دے رہی ہے میں یقین سے کہ سکتا ہو کہ وہ کبھی بھی ترقی نہیں کر سکتی ۔ کیونکہ ہم بنیادی تعلیم کی اہمیت کو نظر انداوز نہیں کر سکتے اور آج مجھے نوجوان نسل کی استقامت اور عزم دیکھ کر خوشی ہورہی ہے کہ آپ کو ہر شعبہ میں تر قی یافتہ بنانے میں مدد ملے گی ۔ آج ہم باقی دنیا اور ترقی یا فتہ ممالک کے ساتھ مقابلہ کر رہے ہیں اور اس سے ظاہر ہوتا ہے کہ ہمارے ینگ فزیکسٹ کے پاس اتنی صلاحیت موجود ہے کہ وہ دوسرے ممالک سے مقابلہ کر سکیں اور ہار جیت اپنی جگہ ہے لیکن آپ سب کا یہاں موجود ہونا اور مقابلہ کا حصہ ہونا سب سے اہم بات ہے ۔

وائس چانسلر ڈاکٹر صائمہ حمید کا کہنا تھا کہ مجھے خوشی محسوس ہورہی ہے کہ فاطمہ یونیورسٹی کو اس پروگرام کی میزبانی کا موقعہ ملا اور مجھے یقین ہے کہ آپ اس دو روزہ کانفرنس کیلئے بہت پُر جوش ہو گے اور ہمارے لیے فخر کی بات ہے کہ ملک بھر سے نوجوان نسل نے اس پروگرام میں حصہ لیا ۔ اس طرح کے مقابلوں کے تجربات سے آپ سب کو سیکھنے کیلئے بہت کچھ ملے گا جوکہ زندگی بھر آپ کے کام آئے گا ۔ اس سے لطف انداوز ہو اور نیٹ ورکز بنائیں ۔ اور امید ظاہر کرتی ہو کہ آپ کے سیکھنے کے عمل میں یہ پروگرام بہت مدد گار ثابت ہو گا ۔

اس مقابلے میں ایچسن طالج، لاہور گرائمر سکول ( جوہر ٹاءون)، پاک ترک معارف سکول اینڈ کالج اور بیکن ہاءوس سکول سسٹم ( جوہر ٹاءون کے طالبات نے اس مقابلے میں حصہ لیا ۔ اور انہوں نے اپنے مسائل پیش کیئے ۔ پہلے دن فائنل کیلئے 3 ٹیموں کو سلیکٹ کیا گیا جن کا مقابلے اگلے دن کیا جائیں گا جس میں سے فاتح ٹیم منتخب ہوگی ۔

FJWU Host ‘Pakistan Young Physicist’s Tournament’ (PYPT)

Rawalpindi: (Staff Reporter)The Department of Physics, FJWU in collaboration with ‘Pakistan Young Physicist’s Tournament’ (PYPT) organized the opening ceremony of Physics tournament on January 25, 2020. The tournament is taking place in the Fatima Jinnah Women University and its closing ceremony will take place on January 26, 2020. The office of Research, Innovation & Commercialization (ORIC) of Fatima Jinnah Women University facilitated this event by making overall arrangements for the Young talented participants from different schools of Pakistan.

The titled of this year’s ‘Young Pakistan Physicists Tournament’ is “National Competition of Young Physicists”. PYPT serves as a qualification tournament to select students for representing Pakistan as a in the international competition. The International Young Physicists’ Tournament (IYPT) takes place in Pakistan every year. The Participants from Aitchison College, Lahore Grammar school (Johar Town), Pak Turk Maarif School and College and Beacon House School System (Johar Town) participated in this competition and they presented their problems, which were already assigned to them.

On the first day three teams will qualify for the finals on January 26,2020.

Chief Guest of the opening ceremony was Former Chairman, HEC, Prof. Dr. Mukhtar Ahmed, while talking to young participants he congratulated the Vice Chancellor Dr. Saima Hamid for this good initiative and said please remember the Muslim Scientists as well. He added that Muslims we were not that bad like we are now a days, history is full of amazing Muslim scientists and physicians who contributed a lot in the fields of Physics, Mathematics, Astronomy, Medical, Surgery and many other fields.

He further said that Muslims scientist worked fantastically in the field of Physics and then we lost our directions and priorities that’s why we are suffering .The Subject of Physics and mathematics are very important and crucial ones and indeed a base line for all modern scientific inventions.

He stressed on the importance of knowledge economy and urged young people to realize the significance of changing educational trends and requirements. He said that he is very delighted to see young generation’s consistence and determination to grow and learn modern subjects. He encouraged participants and said that there is no win or lose in the competition and the best thing is that you are here and competing at national level and struggling to qualify for the International Level. He promised that we, as senior educationists will provide the best of the best knowledge to our youth and youth will contribute for the welfare of society and human being.

Vice chancellor Dr. Saima Hamid while talking to the participants, said that you are all familiar with the history as now all the salient points have been highlighted. You must appreciate that endeavor the cream of the cream or cream of the nation rather that has been selected for this particular event. And I’m sure you must be very excited for this tournament and I’m glad to see the participation of young generation from across the country and it is the privilege for FJWU to host you for these two days. But please remember during the proceedings of this event you’ll be exposed to a ray of experienced in which you have to give your best to challenges that are oppose to you and please remembers to enjoy experience and develop your networks. It is the time in which few of you would be selected, but remember all of you went through process and reached this point. Be thankful for it and you should be proud of your achievements today. I would wish you all the best and I hope that we really mark at the international event as well.

LEAVE A REPLY